Pakistan's Urdu Forum (IT Knowledge)

For IT education (education for all)


    بدل سکا نہ جدائی کے غم اٹھا کر بھی

    Share
    avatar
    kamrankhan143
    Super Moderator

    Posts : 271
    Join date : 2010-03-17
    Age : 32
    Location : Abu Dhabi

    بدل سکا نہ جدائی کے غم اٹھا کر بھی

    Post by kamrankhan143 on Sun Mar 21, 2010 3:15 pm

    بدل سکا نہ جدائی کے غم اٹھا کر بھی
    کہ میں تو میں رہا تجھ سے دور جا کر بھی

    میں سخت جان تھا اس کرب سے بھی بچ نکلا
    میں جی رہا ہوں تجھے ہاتھ سے گنوا کر بھی

    خدا کرے تجھے دوری ہی راس آجائے
    تو کیا کرے گا بھلا یہاں آ کر بھی

    ابھی تو میرے بکھرنے کا کھیل باقی ہے
    میں خوش نہیں ہوں اپنا گھر لٹا کر بھی

    میں اس کو سطح سے محسوس کر کے بھی خوش ہوں
    وہ مطمئن ہی نہیں میری تہہ کو پا کر بھی

    ابھی تک اس نے کوئی بھی تو فیصلہ نہ کیا
    وہ چپ ہے مجھ کو ہر اک طرح آزما کر بھی

    اس طرح ہجوم میں لڑ بھڑ کے زندگی کر لو
    رہا نہ جائے گا دنیا سے دور جا کر بھی

    کھلا یہ بھید تنہائیاں ہی قسمت ہیں
    اک عمر دیکھ لیا محفلیں سجا کر بھی

    رکا نہ ظلم میرے راکھ بننے پر بھی ریاض
    ہوا کی خو تو وہی ہے مجھے جلا کر بھی

      Current date/time is Fri Oct 20, 2017 10:01 am